ہم کو محشر میں کیا چاہئے

ہم کو محشر میں کیا چاہئے
دامن مصطفی چاہئے
حمد باری کی تکمیل میں
مدحت مصطفی چاہئے
آنکھ کو نم،تڑپ قلب میں
وہ کرم یہ عطا چاہئے
ان کی رحمت بہانہ طلب
چاہئے التجا چاہئے
دم غنیمت ہیں اہل نظر
ہم کو ان کی دعا چاہئے
وہ تصور میں ہیں رات دن
اے ادیؔب اور کیا چاہئے